اهل البيت

اسلامي احاديث خطب ادعية
 
الرئيسيةاليوميةس .و .جبحـثالأعضاءالمجموعاتالتسجيلدخول

شاطر | 
 

 الحسد حديث

اذهب الى الأسفل 
كاتب الموضوعرسالة
Admin
Admin
avatar

المساهمات : 648
تاريخ التسجيل : 21/04/2016

مُساهمةموضوع: الحسد حديث   السبت أغسطس 20, 2016 12:03 am

بسم الله الرحمن الرحيم

سورۃ 4 (An-Nisa) آیت 54
أَمْ يَحْسُدُونَ ٱلنَّاسَ عَلَىٰ مَآ ءَاتَىٰهُمُ ٱللَّهُ مِن فَضْلِهِۦ ۖ فَقَدْ ءَاتَيْنَآ ءَالَ إِبْرَٰهِيمَ ٱلْكِتَٰبَ وَٱلْحِكْمَةَ وَءَاتَيْنَٰهُم مُّلْكًا عَظِيمًا

یا لوگوں سے حسد کرتے ہیں اس پر جو اللہ نے انہیں اپنے فضل سے دیا تو ہم نے تو ابراہیم کی اولاد کو کتاب اور حکمت عطا فرمائی اور انہیں بڑا ملک دیا


حسد۔احادیث کی روشنی میں


امیرالمومنین﴿ع﴾ فرماتے ہیں:

صحۃ الجسدمن قلۃ الحسد(۱﴾
حسد کی کمی بدن کی تندروستی کا سبب بنتی ہے۔

الحسد د اء عیاء لایزول الابھلک الحاسد اوبموت المحسود(۲﴾
یعنی حسد ایک ایسی مہلک بیماری ہے جو حاسد کی ہلاکت یا محسود کی موت کے ساتھ ہی ختم ہو سکتی ہے۔

۔ رسول خدا فرماتے ہیں:
ایاکم والحسد فان الحسد یأکل الحسنات کماتأکل النار الحطب(۳﴾
حسد سے بچو کیونکہ حسد نیکیوں کو ایسے کھا جاتا ہے جس طرح آگ لکڑیوں کو۔

امام صادق﴿ع﴾ فرماتے ہیں:
فان الحسد یا کل الایمان کما تأکل النار الحطب(۴﴾
یقیناحسد نیکیوں کو ایسے کھا جاتا ہے جس طرح آگ لکڑیوں کو۔


۔ امام صادق﴿ع﴾ فرماتے ہیں:

ان المومن یغبط ولا یحسد والمنافق یحسد ولا یغبط(۶﴾
بے شک مومن رشک کرتا ہے حسد نہیں کرنا اور منافق حسد کرتا ہے رشک نہیں کرتا۔

یغتاب اذا غاب ویتملق اذا شھد ویشمت بالمصیبۃ(۷﴾
پشت پیچھے برائی کرتا ہے، سامنے چاپلوسی کرتا ہے اور دوسروں کی مصیبت پر خوش ہوتا ہے۔

نیز امیرالمومنین﴿ع﴾ فرماتے ہیں:

الحاسد یفرح بالشر و یغتم بالسرور (۸﴾
حاسد دوسروں کی مصیبتوں پر خوش ہوتا ہے اور خوشیوں پر غمگین ہوتا ہے۔

امیرالمومنین﴿ع﴾ فرماتے ہیں:

من رضی بحالہ لم یعتورہ الحسد(۱۶﴾

جو اپنی حالت پر راضی ہو جائے حسداس پرغالب نہیں آسکتا۔

رسول خدا فرمایا:

اذا حسدت فاستغفراللہ(۱۷﴾

جب حسد میں مبتلا ہوجائے تو خدا سے استغفار کرو


رسول اللہ صلی اللہ علیہ وعلی آلہ وسلم کا اِرشاد مبارک ہے ((((( لاَ حَسَدَ إِلاَّ فِى اثْنَتَيْنِ رَجُلٌ آتَاهُ اللَّهُ مَالاً فَسَلَّطَهُ عَلَى هَلَكَتِهِ فِى الْحَقِّ ، وَرَجُلٌ آتَاهُ اللَّهُ حِكْمَةً فَهْوَ يَقْضِى بِهَا وَيُعَلِّمُهَا:::دو چیزوں کے عِلاوہ کسی چیز کے بارے میں حسد کرنا جائز نہیں (۱) کسی شخص کو اللہ نے دولت دی ہواور وہ اُس حق کی بلندی کے لیےپوری طرح سے خرچ کرتا ہو، اور (۲)وہ شخص جسے اللہ نے حِکمت عطاء کی ہو اور وہ اس کے ذریعے فیصلے کرتا ہو اُس کی تعلیم دیتا ہو


http://www.ahl-ul-bait.org/ur.php/page,25999A144675.html?PHPSESSID=1462cd02c374c45a878d5eba677c4770


الرجوع الى أعلى الصفحة اذهب الى الأسفل
معاينة صفحة البيانات الشخصي للعضو http://duahadith.forumarabia.com
 
الحسد حديث
الرجوع الى أعلى الصفحة 
صفحة 1 من اصل 1

صلاحيات هذا المنتدى:لاتستطيع الرد على المواضيع في هذا المنتدى
اهل البيت :: الفئة الأولى :: quran dua hadith in urdu باللغة الباكستان :: حديث-
انتقل الى: